سفارش، دھمکی اور دباؤ نیب دفتر کے باہر ختم ہو جاتا ہے، چیئرمین نیب

سفارش، دھمکی اور دباؤ نیب دفتر کے باہر ختم ہو جاتا ہے، چیئرمین نیب

 07:26 pm  

اسلام آباد: چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال نے کہا ہے کہ سفارش، دھمکی اور دباؤ نیب کے باہر ختم ہو جاتا ہے، کرپشن کرنے والوں کو ہر صورت جوابدہ ہونا پڑے گا۔ 

نیب ہیڈ کوارٹرمیں  میرٹ سرٹیفکیٹس تقسیم کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین نیب جسٹس(ر) جاوید اقبال کا کہنا تھا کہ نیب ہر شعبہ میں میرٹ پر عمل پیرا ہے، تمام افسران نے ادارے کی مجموعی کارکردگی میں اہم کردار ادا کیا اور بحیثت چیئرمین نیب عہدہ سنبھالنے کے بعد نیب کو فعال ادارہ بنانے کے لئے ہر ممکن اقدامات کیے ہیں۔

چیئرمین نیب نے کہا کہ بدعنوانی کا خاتمہ اور میگا کرپشن مقدمات کو انجام تک پہنچانا نیب کی اولین ترجیح ہے، سفارش دھمکی اور دباؤ نیب کے باہر ختم ہو جاتا ہے، نیب کی پالیسی احتساب سب کیلئے ہے، کرپشن کرنے والوں کو ہر صورت جوابدہ ہونا پڑے گا، نیب کی کسی سے ذاتی رنجش نہیں اور نہ ہی کسی کے خلاف غلط کیس بنانے کی ضرورت ہے، ملک سے بدعنوانی کا خاتمہ نیب کی اولین ترجیح  اور زیرو ٹالرنس اور خود احتسابی کی پالیسی پر سختی سے عمل پیرا ہیں۔

جسٹس (ر) جاوید اقبال نے کہا کہ نیب نے ایسا کوئی اقدام نہیں کیا جس سے بیورو کریسی میں بددلی پھیلے یا معیشت کو نقصان پہنچے، نیب نےگزشتہ 2 سال کے دوران مجموعی طور پر بدعنوان عناصر سے بلا واسطہ اور بلواسطہ لوٹے گئے 178 ارب روپے وصول کرکے قومی خزانے میں جمع کرائے، جب کہ مجموعی طور پر اپنے قیام سے اب تک 328 ارب روپے وصول کر کے قومی خزانے میں جمع کرائے جاچکے ہیں۔

تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ محفوظ ہیں۔
Copyright © 2019 Urdu News. All Rights Reserved